بدھ, نومبر 30, 2016

سوال جواب (حکمتِ رومی)




ایک مرید نے مولانا روم سے چند سوالات پوچھے جن کے انہوں نے بہت خوبصورت، مختصر اور جامع جوابات عطا فرمائے جو بالترتیب پیش خدمت ہیں:


1- زہر کسے کہتے ہیں؟

جواب: ہر وہ چیز جو ہماری ضرورت سے زائد ہو وہ ہمارے لیے زہر ہے۔ خواہ وہ قوت و اقتدار ہو، دولت ہو، بھوک ہو، انانیت ہو، لالچ ہو، سستی و کاہلی ہو، محبت ہو، عزم و ہمت ہو، نفرت ہو یا کچھ بھی ہو۔


2- خوف کس شے کا نام ہے؟

جواب: غیر متوقع صورت حال کو قبول نہ کرنے کا نام خوف ہے۔ اگر ہم غیر متوقع کو قبول کرلیں تو وہ ایک ایڈونچر، ایک مہم جوئی میں تبدیل ہو جاتی ہے۔


3- حسد کسے کہتے ہیں؟

جواب: دوسروں میں خیر اور خوبی کو تسلیم نہ کرنے کا نام حسد ہے۔ اگر ہم اس خوبی کو تسلیم کرلیں تو یہ رشک اور انسپائریشن بن کر ہمارے لیے ایک مہمیز کا کام انجام دیتی ہے۔


4- غصہ کس بلا کا نام ہے؟

جواب: کو امور ہمارے قابو سے باہر ہو جائیں، ان کو تسلیم نہ کرنے کا نام غصہ ہے۔ اگر ہم ان کو تسلیم کرلیں تو عفو درگزر اور تحمل اس کی جگہ لے لیتے ہیں۔


5- نفرت کسے کہتے ہیں؟

جواب: کسی شخص کو جیسا کہ وہ ہے، تسلیم نہ کرنے کا نام نفرت ہے۔ اگر ہم غیر مشروط طور پر اسے تسلیم کرلیں اسے محبت کہیں گے۔

0 comments:

ایک تبصرہ شائع کریں