اشاعتیں

2017 سے پوسٹس دکھائی جا رہی ہیں

آج کی بات ۔۔۔۔ 16 اکتوبر 2017

تصویر
~!~ آج کی بات ~!~
منزلوں کا پا لینا کتنی بڑی قیامت ہے، سب کچھ بے معنی ہو کر رہ جاتا ہے۔ خود منزل بھی۔۔۔
مجھے ایسا لگتا ہے جیسے طلب سےعظیم تر کوئی منزل نہیں۔ طلب اور جدوجہد، شاید یہ بشریت کا تقاضا ہو 
اقتباس: ممتاز مفتی کی کتاب "لبیک" سے

اللہ کا صفاتی نام "السلام" اور اس کے تقاضے

تصویر
اللہ کا صفاتی نام "السلام" اور اس کے تقاضے خطبہ جمعہ مسجد نبوی ترجمہ: شفقت الرحمان مغل
فضیلۃ الشیخ ڈاکٹر جسٹس عبد المحسن بن محمد القاسم حفظہ اللہ نے23-محرم الحرام-1439 کا خطبہ جمعہ مسجد نبوی میں"اللہ کا صفاتی نام السلام اور اس کے تقاضے" کے عنوان پر ارشاد فرمایا، جس میں انہوں نے کہا کہ السلام اللہ تعالی کا نام ہے اور اس میں اللہ تعالی کی ہمہ قسم کے نقائص ، شرکاء، ہمسر سے سلامتی کا معنی ہے، اللہ تعالی سے سلامتی مانگنا اسم مبارک کا تقاضا ہے، اللہ تعالی نے انبیائے کرام سمیت اپنے بندوں پر سلامتی نال فرمائی اور ہم سب نماز میں سب کیلیے سلامتی طلب بھی کرتے ہیں، اسی نام کی نسبت سے ہم ایک دوسرے کو سلام کرتے ہیں۔
خطبے سے منتخب اقتباس پیش ہے:
مسلمانو!
اللہ تعالی کے نام بہترین ہیں اور اسی کی صفات اعلی ترین ہیں، کائنات اور شرعی احکام میں موجود نشانیاں اسی بات کی گواہ ہیں، اللہ تعالی کے تمام اسما و صفات مخلوق سے بندگی اور عبادت کا تقاضا بھی بالکل اسی طرح کرتے ہیں جیسے اللہ تعالی کے خالق ہونے اور پیدا کرنے کے متقاضی ہیں، نیز ہر نام اور صفت کی مخصوص بندگی بھی ہے جس پر ایمان رکھنا ا…

آج کی بات ۔۔۔ 14 اکتوبر 2017

تصویر
~!~ آج کی بات ~!~
" لوگوں كو آپ میں تبدیلی نظر آجائے گی۔۔  لیكن اپنا وه رویہ نظر نہیں آئے گا جو اس تبدیلی كی وجہ بنا "

طاغوت کا انکار

تصویر
"*طاغوت* لغت کے اعتبار سے ہر اس شخص کو کہا جائے گا جو اپنی جائز حد سے تجاوز کر گیا۔ قران کی اصطلاح میں طاغوت سے مراد وہ بندہ ہے جو بندگی کی حد سے تجاوز کر کے خود آقائی و خداوندی کا دم بھرے اور خدا کے بندوں سے اپنی بندگی کرائے۔
خدا کے مقابلے میں ایک بندے کی سرکشی کے تین مرتبے ہیں:
پہلا مرتبہ یہ ہے کہ بندہ اصولاً اس کی فرمانبرداری ہی کو حق مانے، مگر عملاً اس کے احکام کی خلاف ورزی کرے۔ اس کا نام *فسق* ہے۔
دوسرا مرتبہ یہ ہے کہ وہ اس کی فرمابرداری سے اصولاً منحرف ہو کر یا تو خود مختار بن جائے، یا اس کے سوا کسی اور کی بندگی کرنے لگے، یہ *کفر* ہے۔
تیسرا مرتبہ یہ ہے کہ وہ مالک سے باغی ہو کراس کے ملک اور اس کی رعیت میں خود اپنا حکم چلانے لگے۔ اس آخری مرتبے پر جو بندہ پہنچ جائے اس کا نام *طاغوت* ہے۔ اور کوئی شخص صحیح معنوں میں اللّه کا مومن نہیں ہو سکتا , جب تک کہ وه اس طاغوت کا منکر نہ ہو.
"..اب جو کوئی طاغوت کا انکار کر کے اللہ پر ایمان لے آیا، اُس نے ایک ایسا مضبوط سہارا تھام لیا، جو کبھی ٹوٹنے والا نہیں، اور اللہ (جس کا سہارا اس نے لیا ہے) سب کچھ سننے اور جاننے والا ہے.  جو لوگ ا…

آئینہ سوچ گر دکھانے لگے

تصویر
حل مسائل ہیں خود بتانے لگے اب تو خود خواب ہیں جگانے لگے
غور کرتا ہوں اب میں لہجوں پر لفظ معنی نہیں بتانے لگے
جانے کیا کیا فساد ہو جائے آئینہ سوچ گر دکھانے لگے
سمجھو دستک ہے خوش نصیبی کی وقت جب آپ کو سکھانے لگے
اتباف ابرک

کہانی ہم سب کی

تصویر
کہانی ہم سب کی !!! (عربی سے ترجمہ) (منقول)
میں نے خواہش کی  میں شادی کروں،اور میں نے شادی کر بھی لی،اولاد کی نعمت سے محرومی کے باعث زندگی میں وحشت سی تھی. پھر میں نے خواہش کی میرے آنگن میں بھی پھول کھلے،میرے گھر میں بھی بچوں کی ننھی آوازیں سنائی دیں. مجھے رب تعالی نے اولاد کی نعمت سے بھی نوازا،اب گھر کی دیواریں تنگی ء داماں کی شکایت کرنے لگیں. پھر میں نے خواہش کی میرا اپنا گھر ہو،اس کے ساتھ میں ایک باغیچہ ہو، کچھ عرصہ بعد میرے پاس گھر بھی تھا اور باغیچہ بھی مگر اولاد بڑی ہوچکی تھی. پھر میں نے خواہش کی بچوں کی شادیاں کروں،میں اس فریضے سے بھی سبکدوش ہوا،مگر اب مشقت بھرے کام اور جاب سے تھک گیا تھا. پھر میں نے خواہش کی ریٹائرمنٹ لیکر باقی زندگی آرام کروں، میں نے ریٹائرمنٹ لی، بچے شادیاں کرکے اپنے گھر بسا چکے تھے میں تنہا ہوچکا تھا بالکل اسی طرح جب میں یونیورسٹی اور سٹوڈنٹ لائف سے فارغ ہوا تھا مگر فرق یہ تھا تب میں زندگی کی طرف بڑھ رہا تھا اور اب واپس لوٹ رہا تھا. لیکن خواہشات تھی کہ ختم نہیں ہو رہی تھیں. پھر میں نے خواہش کی قرآن مجید حفظ کروں، لیکن میرا قوت حافظہ جواب دے چکا تھا. پھر میں نے خواہ…

حفظ ما تقدم

تصویر
ائیرپورٹ سات بجے پہنچنا ہو تو ہم  کہتے ہیں۔۔...!! پہنچنا تو 7 بجے ہے لیکن !!!             To Be On The Safe Side ہم 5 بجے ہی گھر سے نکل جائیں گے ... یعنی دیرسے پہنچنے کا رسک نہیں لینا....
انٹرویو کے لیے 11 بجے پہنچنا ہے لیکن بندہ 10 بجے نکل لیتا ہے... کہتا ہے! جناب مجھے پہنچنا تو 11 بجے ہی ہے مگر۔۔۔۔۔۔        To Be On The Safe Side میں ایک گھنٹه پہلے ہی نکل جاتا ہوں!! یعنی لیٹ ہوجانے کا رسک نہیں لیتا.....!!!
مہمان بلاتے ہیں پندرہ لیکن  کہتے ہیں.....!!!  مہمان تو آنے پندرہ ہی ہیں لیکن!         To Be On The Safe Side  20 مہمانوں کا کھانا بنا لیتے ہیں..۔!! یعنی مہمان تو 15 ہی آئیں گے لیکن کھانا کم ہوجانے کا رسک نہیں لے رہے....!!!
ہم دنیا کے بارے میں بہت محتاط ہیں، یه جو            To Be On The Safe Side  کے الفاظ ہیں ان کو اسلامی نکتهِ نظر سے دیکھا جائے......  تو اسی کو تقویٰ کہتے ہیں!! کہ بندے کو ہمیشه            To Be On The Safe Side  ﭘر ہوکر زندگی گزارنى چاھیئے.... اسکو گناه کا رسک ہی نہیں لینا چاھیئے۔۔۔ کیا پتا کب کہاں زندگی کی شام ہو جائے!!..

دور جدید کی بد تہذیبی: پگڑی اچھالنا - خطبہ جمعہ مسجد نبوی

تصویر
دور جدید کی بد تہذیبی: پگڑی اچھالنا - خطبہ جمعہ مسجد نبوی ترجمہ: شفقت الرحمان مغل

فضیلۃ الشیخ ڈاکٹر عبد الباری بن عواض ثبیتی حفظہ اللہ  نے مسجد نبوی میں 16-محرم الحرام- 1439 کا خطبہ جمعہ " دور جدید کی بد تہذیبی: پگڑی اچھالنا" کے عنوان پر ارشاد فرمایا  جس میں انہوں نے  کہا  کہ  انسانیت کے ارتقائی مراحل کی تکمیل کے لیے اسلام نے  پہلے پر امن زندگی کا مفہوم بتلایا پھر اس کی تکمیل کے لیے ترغیب  دیتے ہوئے تعلیمات بتلائیں ،اس کے بعد تعلیمات کی خلاف ورزی کرنے والوں کے لیے کڑی سزائیں رکھیں، اس طرح اسلام نے جرائم کی روک تھام کے لیے جرائم سے پہلے اور بعد میں مثبت اقدامات کیے ،
خطبے سے منتخب اقتباس پیش ہے:
تمام تعریفیں اللہ رب العالمین کے لیے ہیں، اسی نے فرمایا:  {الَّذِينَ آمَنُوا وَلَمْ يَلْبِسُوا إِيمَانَهُمْ بِظُلْمٍ أُولَئِكَ لَهُمُ الْأَمْنُ وَهُمْ مُهْتَدُونَ}  جو لوگ ایمان لائے اور انہوں نے اپنے ایمان میں ظلم [یعنی شرک] کی آمیزش نہیں کی تو انہی کے لیے امن ہے اور وہی ہدایت یافتہ ہیں۔[الأنعام: 82]
اسلام نے انسانیت کو اعلی مقام دینے کے لیے  پر اطمینان  اور امن  و سلامتی والی زندگی کا…

آج کی بات ۔۔۔ 10 اکتوبر 2017

تصویر
~!~ آج کی بات ~!~
نصیحت کیجئیے! مگر نصیحت شرمندہ کرنے کے لیے نہ ہو، مقصد دستک دینا ہو، دروازہ توڑنا نہیں۔

ہم نے تجھے جانا ھے فقط تیری عطا سے ۔

تصویر
حمد باری تعالیٰ عتیق احمد جاذب
ہم نے تجھے جانا ہے فقط تیری عطا سے ۔
سورج کے اجالوں سے ، فضاوں سے ، خلاء سے ‛ چاند اور ستاروں کی چمک اور ضیاء سے ‛ جنگل کی خموشی سے ، پہاڑوں کی انا سے ‛ پُر ہَول سمندر سے ، پراسرار گھٹا سے ‛ بجلی کے چمکنے سے ، کڑکنے کی صدا سے ‛ مٹی کے خزانوں سے ، اناجوں سے ، غذا سے ‛ برسات سے ، طوفان سے ، پانی سے ، ہوا سے ‛
ہم نے تجھے جانا ہے فقط تیری عطا سے​ ۔
گلشن کی بہاروں سے ، تو کلیوں کی حیاء سے ‛ معصوم سی روتی ہوئی شبنم کی ادا سے ‛ لہراتی ہوئی بادِ سحر ، بادِ صبا سے ‛ ہر رنگ کے ، ہر شان کے ، پھولوں کی قبا سے ‛ چڑیوں کے چہکنے سے ، تو بلبل کی نوا سے ‛ موتی کی نزاکت سے ، تو ہیرے کی جلا سے ‛ ہر شے کے جھلکتے ہوئے فن اور کلا سے ‛
​ہم نے تجھے جانا ہے فقط تیری عطا سے​ ۔
دنیا کے حوادث سے ، وفاؤں سے ، جفا سے ‛ رنج و غم و آلام سے ، دردوں سے ، دوا سے ‛ خوشیوں سے ، تبسم سے ، مریضوں کی شفا سے ‛ بچوں کی شرارت سے ، تو ماؤں کی دعا سے ‛ نیکی سے ، عبادات سے ، لغزش سے ، خطا سے ‛ خود اپنے ہی سینے کے دھڑکنے کی صدا سے ‛ وحدت تیری ہر گام پہ دیتی ہے دلاسے ‛
​ہم نے تجھے جانا ہے فقط تیری عطا سے​ …

تدبر القرآن ۔۔۔ سورۃ المؤمنون ۔۔۔ از نعمان علی خان ۔۔۔ حصہ -3

تصویر
تدبر القرآن سورۃ المؤمنون از نعمان علی خان حصہ -3
وَالَّذِينَ هُمْ لِأَمَانَاتِهِمْ وَعَهْدِهِمْ رَاعُونَ اور جو اپنی امانتوں اور اپنے وعدہ کا لحاظ رکھنے والے ہیں
یعنی جب ان لوگوں کو امانت دی جاتی ہے یا وہ کوئی وعدہ کرتے ہیں تو اس پر توجہ دیتے ہیں۔ وہ ان معاملو ں کو ہلکا نہیں لیتے۔ اور یہ امانت اور وعدے، دولت کی صورت میں بھی ہوسکتے ہیں، یا کوئی راز جو انہیں بتایا گیا ہو، کوئی کام جو آپ کے ذمے دیا گیا ہو، یا کوئی فرض جسے پورا کرنا ضروری ہو، کیونکہ وعدے کی مختلف صورتیں ہوتی ہیں۔ یہ کوئی ذمہ داری بھی ہوسکتی ہے جو کسی نے آپ کو دی ہو۔ وہ وعدے جو انہوں نے بندوں سے کیے ہیں یا پھر اللہ سے وہ اُس پر توجہ دیتے ہیں۔
وَالَّذِينَ هُمْ عَلَىٰ صَلَوَاتِهِمْ يُحَافِظُونَ اور جو اپنی نمازوں کی حفاظت کرتے ہیں
شروعات میں نماز کے دوران خشوع کا ذکر ہوا تھا اور یہاں پر نماز کی حفاظت کا ذکر کیا جا رہا ہے۔  صلاۃ ہماری زندگی کا حصہ ہے۔ ہمیں اس کی حفاظت کرنا ہوگی۔ آپ فجر پڑھ کر عشاء نہیں چھوڑ سکتے۔ پوری نمازوں کو ادا کرنا لازم ہے۔ یہی کامیابی کا راستہ ہے۔  اسلیے ہمیں اس کا دیہان کرنا چاہیے ہے، وقت پہ تمام ارکان…

آج کی بات ۔۔۔۔ 05 اکتوبر 2017

تصویر
~!~ آج کی بات ~!~
خاموشی کی ایک دُنیا ہے ، اِس میں اگر آپ داخل ہو سکتے ہیں تو پھر آپ ہی اُس کا مزہ لے سکتے ہیں۔

آج کی بات ۔۔۔ 04 اکتوبر 2017

تصویر
~!~ آج کی بات ~!~
ہر انسان دوسرے انسان کے بنائے گئے ذہنی سانچے میں ڈھل ہی نہیں سکتا طبیعتوں کا اختلاف فطری امر ہے البتہ برداشت اور احترام انسانی اختیار ہے۔

"بچے" بن کے رہیں

تصویر
جانتے ہیں ہم اپنے ماں باپ پر سب سے بڑا ظلم کیا کرتے ہیں۔..؟ ہم ان کے سامنے"بڑے" بن جاتے ہیں ... "سیانے" ہو جاتے ہیں ... اپنے تحت بڑے "پارسا نیک اور پرہیزگار" بن جاتے ہیں ... وہی ماں باپ جنہوں نے ہمیں سبق پڑھایا ہوتا ہے ۔. انھیں "سبق" پڑھانے لگتے ہیں ... "ابا جی یہ نہ کرو یہ غلط ہے ۔. اماں جی یہ آپ نے کیا کیا .. آپ کو نہیں پتا ایسے نہیں کرتے ... ابا جی آپ یہاں کیوں گئے۔. اماں جی پھر گڑبڑ کر دی آپ نے .. سارے کام خراب کر دیتی ہیں آپ .." اب کیسے سمجھاؤں آپ کو ... جانتے ہو صاحب ... ہمارا یہ "بڑا پن یہ سیانا پن" ہمارے اندر کے "احساس" کو مار دیتا ہے ... وہ احساس جس سے ہم یہ محسوس کر سکیں ... کہ ہمارے ماں باپ اب بالکل بچے بن گئے ہیں۔..  وہ عمر کے ساتھ ساتھ بے شمار ذہنی گنجلگوں سے آزاد ہوتے جا رہے ہیں ... چھوٹی سے خوشی ... تھوڑا سا پیار... ہلکی سی مسکراہٹ ...  انھیں نہال کرنے کے لئے کافی ہوتی ہے ... انھیں "اختیار" سے محروم نہ کرو صاحب .... "سننے" کا اختیار ... "کہنے" کا اختیار ... "ڈانٹنے&…

پنہاں سے تو پیدا کا حوالہ نہیں ملتا

تصویر
جب دیدۂ بینا کا حوالہ نہیں ملتا  پھر کوئی بھی دنیا کا حوالہ نہیں ملتا

وہ عالم بالا تو ترے دل میں مکیں ہے  جس عالم بالا کا حوالہ نہیں ملتا

اعلیٰ میں تو ادنیٰ کے حوالے ہی حوالے  ادنیٰ ہی میں اعلیٰ کا حوالہ نہیں ملتا

جس جان تمنا کے حوالے ہے مری جاں  اس جان تمنا کا حوالہ نہیں ملتا

یہ روح سوالات ہے یا کوئی مناجات  کیا ملتا ہے بس کیا کا حوالہ نہیں ملتا

ہم آج ہیں اور آج تو ہے کل سے بھی آگے  اچھا ہے جو فردا کا حوالہ نہیں ملتا

پیدا ہے تو پنہاں کے حوالوں سے بھرا ہے  پنہاں سے تو پیدا کا حوالہ نہیں ملتا

تو اپنے حوالے کی ہوا کھا کے ہی خوش رہ  ہر آن حوالہ کا حوالہ نہیں ملتا

بہتر ہے کہ اب خود سے جدا ہو کے بھی دیکھیں  دریا میں تو دریا کا حوالہ نہیں ملتا

مشکورؔ مری جان چلے آئے ہو تنہا  تنہا کو تو تنہا کا حوالہ نہیں ملتا
مشکور حسین یاد

نیند، خدا اور سائنس

تصویر
نیند، خدا اور سائنس مجیب الحق حقی
کیا آپ بتا سکتے ہیں کہ سوتے میں آپ کہاں ہوتے ہیں؟ کیا نیند میں ہم معدوم نہیں ہوجاتے کہ ہمیں خود پتہ نہیں ہوتا کہ ہم کہاں ہیں؟
دنیا میں ہر چیز اپنے حوالے سے ایک جواز رکھتی ہے، مگر کچھ مظاہر تو انسانی وجود میں اس کی پیدائش کے ساتھ پیوست ہو کر اس کی ذات کا حصّہ بن چکے ہوتے ہیں کہ انسان ان کے جواز کے بارے میں بھی نہیں سوچتا۔ بے شمار ایسے مظاہر ہیں جو اتنے تواتر اور تسلسل سے ہوتے ہیں کہ انسان انہیں لاشعوری طور پرکارگاہ ِحیات کا لازم جزو سمجھ کر قبول کرتا ہے۔ ان میں ایک نیند ہے۔ نیند ایک مسٹری ہے۔
نیند کیا ہے؟ ہمیں نیند کیوں آتی ہے؟
سائنس کے مطابق نیند ایک فطری فینامینن یا مظہر ہے، ایسی فطری خاصیت جو شعور کو وقتی طور پر معطّل کر دیتی ہے۔ اس کے مطابق نیند شعور کے بدلتے ہوئے فطری مرحلے ہیں جس میں تمام حواس اور جسم کے عضلات اطراف کے ماحول سے لاتعلّق ہوجاتے ہیں۔ درحقیقت یہ نیند کی سائنسی توجیہ کے بجائے اس کی طبعی اور علمی وضاحت ہے۔ ریسرچ کے مطابق جاگنے کے دوران اور کام کی تھکان سے جسم میں کیمیکل جمع ہوجانے سے غنودگی کا پریشر بنتا ہے، جس سے نیند کی کیفیت طاری ہو…

اتحاد بین المسلمین، اسباب اور رکاوٹیں - خطبہ جمعہ مسجد نبوی

تصویر
اتحاد بین المسلمین، اسباب اور رکاوٹیں -  خطبہ جمعہ مسجد نبوی ترجمہ: شفقت الرحمان مغل
فضیلۃ الشیخ پروفیسر ڈاکٹر علی بن عبد الرحمن الحذیفی حفظہ اللہ نے 09 -محرم الحرام- 1438  کا خطبہ جمعہ  مسجد نبوی میں بعنوان "اتحاد بین المسلمین،،، اسباب اور رکاوٹیں" ارشاد فرمایا جس میں انہوں نے کہا کہ شریعت مطہرہ مسلمانوں کو باہمی اتفاق اور اتحاد  کی دعوت دیتے ہوئے کسی بھی ایسی سرگرمی سے روکتی ہے جو مسلمانوں میں پھوٹ، منافرت، بغض اور لڑائی جھگڑے کا باعث بنے، اسی لیے شریعت تمام مسلمانوں کو ملت اسلامیہ کے ساتھ وابستگی، حکمران کی اطاعت، اخوت، بھائی چارے اور باہمی تعاون پر زور دیتی ہے، دوسری طرف ظلم ، تذلیل، تحقیر، چوری، ڈاکہ، خیانت اور بدعت سے روکتی ہے۔
خطبے کا منتخب اقتباس پیش ہے:
شریعت مطہرہ نے اتحاد اور اتفاق کا حکم دیا ہے، نیز اختلاف اور گروہ بندی سے روکا ہے؛ تا کہ دین اسلام کو تحفظ ملے۔ اسلام کے بغیر زندگی ممکن ہی نہیں، نیز جنت بھی اسلام پر عمل کر کے ہی ملے گی،  شریعت نے اتحاد کا حکم اس لیے دیا کہ معاشرہ کٹنے پھٹنے سے محفوظ ہو، بے چینی ، تنازعات، بغاوت اور دنگے فساد بپا نہ ہوں۔ باہمی تصادم، …

آج کی بات ۔۔۔ 02 اکتوبر 2017

تصویر
~!~ آج کی بات ~!~
ہر وہ عمل جو مخلوق کے آزار کا باعث ہو، نہ سیاست، نہ عبادت، نہ عقیدت بلکہ جارحیّت ہے۔


آج کی بات ۔۔۔ 01 اکتوبر 2017

تصویر
~!~ آج کی بات ~!~
راستہ ہمیشہ ہوتا ہے، بس اسے ڈھونڈنا پڑتا ہے۔

ہمیں کوا بن جانا چاہئیے

تصویر
"ھمیں کوا بن جانا چاھیے.." آج ظہر کی نماز سے واپسی پر سڑک پر لوگوں کا جم غفیر دیکھا تو سوچا کیوں نا جا کر دیکھا جاۓ معامله کیا ھے , پر ابو جی کی آواز کانوں میں گونجنے لگی.. "جہانگیر ! تجھے منع کیا ھے نا فالتو کے جھگڑوں یا مسئلوں میں پڑنے سے.."
میں تھوڑا جھجک گیا , پر پھر سوچا کونسا ابو جی مجھے دیکھ رھے ھیں , سو میں بھیڑ کی جانب چل پڑا.. وہاں کیا منظر دیکھتا ھوں کہ ایک شخص سڑک پر پڑا تڑپ رھا ھے اور باقی اس کے ارد گرد کھڑے چہ مگوئیاں کر رھے ھیں..
"ارے کیسا اندھا ڈرائیور تھا.."
"بیچارہ پتا نہیں کس لئے گھر سے نکلا تھا , ظالم نے گاڑی مار دی.."
"بھائی انسانیت نہیں رھی.. یار دیکھو ! بیچارہ پڑا ھوا ھے اور کوئی یہ نہیں کہتا کہ اسے ہسپتال ھی لے جایا جاۓ.."
غرض ایسی ھی کچھ آوازیں تھیں..
مجھے غصّہ بھی آیا اور انسانیت کے چیمپئنز جو کھڑے ھوۓ تھے ان پر حیرت بھی ھوئی کہ اسے میں بےحسی کہوں یا کیا..؟ اپنے جیب ٹٹولے تو کوئی ٤٥ روپے تھے میرے پاس.. خیر الله کا نام لیا , اپنے ایک نالایق دوست کو آواز دی جو مجھے دیکھ کر کھسکنے کی کوشش کررھا تھا.. وہ آیا تو اس…

زمرہ جات

سوئے حرم رمضان غزلیں امید سورہ البقرہ دعا سفرِ حج ایمان، استقبال رمضان، خطبہ مسجد نبوی میرے الفاظ پاکستان شاعری میری شاعری محبت یاد حرم صراط مستقیم لبیک اللھم لبیک خلاصہ قرآن سفرنامہ شکر اچھی بات، نعت رسول مقبول توبہ حج 2015 حج 2017 حمد باری تعالٰی خوشی کچھ دل سے #WhoIsMuhammad سورۃ الکہف ملی ترانے نمل استغفار توکل دوستی سفر مدینہ سورہ الرحمٰن پیغامِ حدیث، حکمت کی باتیں سورہ الکوثر سورہ الکھف علامہ اقبال علم 9نومبر آزادی باغبانی سورہ المؤمنون عید مبارک فارسی اشعار، قائد اعظم قرآن کہانی ماں معلومات نمرہ احمد یوم دفاع آبِ حیات جنت جنت کے پتے خطبہ حجتہ الوداع خطبہ مسجد الحرام رومی، زیارات مکہ سورۃ الناس شکریہ قربانی محمد، محمد، سوشل میڈیا، نیا سال، 2017 والد پیغام اقبال یوم پاکستان 11-12-13 16December2014 APS اردو محاورہ جات بارش تقدیر حج 2016 حیا، ذرا مسکرائیے سورج گرہن 2015 سورہ العلق، سورۃ العصر سورۃ الفاتحہ، سوشل میڈیا سوشل میڈیا، طنز و مزاح عاطف سعید عورت قرآن لیس منا مسدس حالی مصحف موسیقی یوم خواتین، عورت
اور دکھائیں

سبسکرائب بذریعہ ای میل