منگل, فروری 28, 2012

~!` Do Raye ~!~



محبٌت میں کبھی دورائے کا امکاں نہیں ھوتا
یہ ھوتی ھے تو ھوتی ھے
نہیں ھوتی تو جتنا بھی جتن کر لو،نہیں ھوتی
کوئی اچھا اگر لگ جائے تو سب خامیاں اُسکی
اچانک، خوبیوں کی اوڑھنی میں چُھپ سی جاتی ھیں
زمانہ لاکھ سمجھائے سنبھل جاؤ
وہ ایسا ھے وہ ویسا ھے
سمجھ میں کچھ نہیں آتا
سماعت اور بصارت کو سُجھائی کچھ نہیں دیتا
سمجھ آتا ھے اُس لمحے
کہ جب دامن میں لاکھوں چھید ھو جائیں
کبوتر کے پروں کے ساتھ لپٹے
سب عیاں جب بھید ھو جائیں
محبٌت میں کبھی دورائے کا امکاں نہیں ھوتا
یہ ھوتی ھے تو ھوتی ھے
نہیں ھوتی تو جتنا بھی جتن کر لو،نہیں ھوتی

فاخرہ بتول

0 comments:

ایک تبصرہ شائع کریں