کوشش کریں کہ سورج بن کر روشنی سب تک پہنچائیں۔۔۔اگر ایسا نہیں کرسکتے تو چاند بن کر سورج کی روشنی کو منعکس کریں تاکہ پھیلی ہوئی تاریکی کم کرنے میں اپنا کردار ادا کرسکیں۔۔ یہ بلاگ اس ‘عکاسی‘ کی ہی ایک چھوٹی سی کوشش ہے----خوش رہیں


دو بھید بھری آنکھیں
اک خواب کی چلمن سے، ہر رات مجھے دیکھیں
دو بھید بھری آنکھیں
ہر صبح کو چڑیوں کی چہکار میں ڈھل جائیں
پھولوں کی قبا پہنیں
شبنم میں بدل جائیں
ہر شام ہوائوں سے احوال میرا پوچھیں
دو بھید بھری آنکھیں
کرتی ہیں عجب باتیں، کاجل کی زباں سے یہ
دل لیتی چلی جائیں، انداز بیاں سے یہ
دو بھید بھری آنکھیں
اک خواب کی چلمن سے ہر رات مجھے دیکھیں
دو بھید بھری آنکھیں

امجد اسلام امجد

تبصرے

حالیہ تبصرے

زیادہ دیکھی گئی تحاریر

دوستی ۔۔۔ میری ایک شعری کاوش

کمال یہ ہے

انتخابِ کلام مسدس حالی