نفرتوں کے شجر



نفرتوں کے شجر کاٹ دو، کاٹ دو
جتنا سکھُ بانٹ سکتے ہو تم بانٹ دو
لوگ سا ئے میں کھنچ کر چلے آئیں گے
جلتے صحراؤں کی دھوپ کو پاٹ دو
 
پروین سلطانہ حنا

تبصرے

زیادہ دیکھی گئی تحاریر

استقبالِ رمضان -17

ماہ رمضان نیکیوں کی بہار – مقتبس خطبہ جمعہ مسجد نبوی

خوش ترین زندگى، زندگى با قناعت است

استقبالِ رمضان-16

زمرہ جات

اور دکھائیں

سبسکرائب بذریعہ ای میل